بالی ووڈ کو ایک اور جھٹکا۔!!! عرفان خان اور رشی کپور کے بعد ایک اور نامور شخصیت انتقال کرگئیں، مداح ٹکریں مار کر رونے لگے

ممبئی (ویب ڈیسک) بالی ووڈ کی مشہور کوریو گرافر سروج خان انتقال کر گئیں، سروج خان کی بالی ووڈ میں سروج خان کو بالی ووڈ میں ’’مدر آف کوریوگرافی‘‘ کا خطاب بھی دیا گیا تھا۔ سروج خان حرکت قلب بند ہونے کی وجہ سے آج صبح مقامی اسپتال میں انتقال کر گئیں۔

انہوں نے بالی ووڈ میں 40 سال تک بالی ووڈ فلم نگری پر حکمرانی کی اور بھارت میں انہیں ” مادر رقص” کا خطاب دیا گیا۔ دراصل ان کا اصل نام نرملا ناگپال تھا وہ 1948ء بمبئی میں پیدا ہوئیں، انہوں نے صرف 3 سال کی عمر سے فلوں میں چائلڈ آرٹسٹ کے حیثیت سے کام شروع کیا تھا جبکہ نو عمری میں بیک گراؤنڈ ڈانسر کے طور پر دکھائی دیں۔ تاہم جلد ہی انہوں نے ڈانس ڈائریکشن بننے کا فیصلہ کیا اور 2000 سے زائد بالی ووڈ اور تامل فلموں میں کوریوگرافی کی جو ابھی ایک ریکارڈ ہے۔ ان کی جانب سے کوریو گراف کی گئیں سب سے مشہور فلموں میں مسٹر انڈیا، ہیرو، چاندنی، تیزاب، ڈر، سیلاب، آئینہ، مہرہ، بازی گر، دل والے دلہنیا لے جائیں گے، اہم دل چکے صنم، تال، لگان فنا، دیوداس، منگل پانڈے، جب وی میٹ،دلی6، اے بی سی اور گلاب گینگ جیسی کامیاب فلمیں شامل ہیں۔ عامر اور شاہ رخ خان کے علاوہ انہوں نے مادھوری ڈکشٹ اور سری دیوی جیسی بڑی اداکاراؤں کی کرویو گرافی بھی کی۔ سروج خان حرکت قلب بند ہونے کی وجہ سے آج صبح مقامی اسپتال میں انتقال کر گئیں۔ انہوں نے بالی ووڈ میں 40 سال تک بالی ووڈ فلم نگری پر حکمرانی کی اور بھارت میں انہیں ” مادر رقص” کا خطاب دیا گیا۔ دراصل ان کا اصل نام نرملا ناگپال تھا وہ 1948ء بمبئی میں پیدا ہوئیں، انہوں نے صرف 3 سال کی عمر سے فلوں میں چائلڈ آرٹسٹ کے حیثیت سے کام شروع کیا تھا جبکہ نو عمری میں بیک گراؤنڈ ڈانسر کے طور پر دکھائی دیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.