بھارتی رافیل بھی پیچھے رہ گیا ۔۔۔۔۔ پاکستان نے بھارتی ریڈاروں کی اسکرینوں کو اندھا کر دینے والا کیا شاندار ہتھیار تیارکر لیا ؟ جان کر آپ کی خوشی کی کوئی انتہا نہ رہے گی

اسلام آباد (ویب ڈیسک) پاکستان نے ریڈار پہ نظر نہ آنے والا جدید ترین ففتھ جنریشن طیارہ بنانے کا پہلا مرحلہ کامیابی سے مکمل کر لیا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق پاک فضائیہ نے رائل انٹرنیشنل ایئر ٹیٹو میں پی اے ایف کے سی130 طیارے کی دم پر اپنے مستقبل کے اسٹیلتھ طیارے کے ڈیزائن کی


نمائش کردی ہے۔ رپورٹ کے مطابق وزارت داخلہ کے سالانہ رسالے میں کہا گیا ہے کہ ای وی آر آئی ڈی سیکرٹریٹ نے تصوراتی ڈیزائن کا پہلا مرحلہ مکمل کرلیا ہے۔ اس میں کہا گیا ہے ’’تصوراتی ڈیزائن کی تکمیل کا پہلا مرحلہ مکمل ہوچکا ہے۔ اس طیارے کی مشکل کارکردگی کے تقاضوں پر مبنی ڈیزائن کی وجہ سے اعلیٰ تجزیہ ٹولز اور کوڈز کا استعمال کرتے ہوئے تخیلاتی ڈیزائن کے اندر پہلا مرحلہ مکمل ہو گیا ہے جبکہ مزید تین مرحلے مکمل کیے جائیں گے۔ پانچویں جنریشن کا یہ فائٹر ایئرکرافٹ پروجیکٹ عزم کے تحت بنایا جا رہا ہے۔ اس رپورٹ سے پی اے ایف کے ملک میں آرٹ ایوی ایشن انڈسٹریل بیس کی حالت تیار کرنے کے عزائم کی نشاندہی ہوئی ہے۔ خیال رہے کہ پروجیکٹ عزم کا باقاعدہ آغاز پی اے ایف نے جولائی 2017 میں کیا تھا اور اس کا ایجنڈا ایک ایف جی ایف اے، ایک درمیانی اونچائی اور طویل برداشت والے، نئی اسلحہ اور بغیر پائلٹ فضائی گاڑی (یو اے وی)، اور کئی دوسرے منصوبے تیار کرنا ہے۔ پروجیکٹ ازم کے آغاز کے اعلان کے بعد اس وقت کے چیف آف ایئر اسٹاف ایئر چیف مارشل سہیل امان نے مطلع کیا تھا کہ بغیر پائلٹ فضائی گاڑی (یو اے وی) کا ڈیزائن اپنے آخری مراحل میں پہنچ گیا ہے۔ تاہم ایف جی ایف اے(سٹیلتھ طیارے) کے معاملے کے متعلق پی اے ایف کے چیف آف ایئر اسٹاف ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان نے ایک حالیہ انٹرویو میں بتایا ہے کہ وہ توقع نہیں کر رہے کہ ایف جی ایف اے ابھی مزید ایک دہائی تک آپریشنل ہوسکے گا۔

Sharing is caring!