بالآخر وزیراعظم عمران خان کو وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی تبدیلی کے لیےراضی کر لیا گیا۔۔۔۔پنجاب کا اگلا وزیراعلیٰ کون ہو گا؟ملکی سیاست میں ہلچل مچا دینے والی خبر

لاہور (ویب ڈیسک) انگریزی اخبار کا بڑا دعویٰ پنجاب میں بڑی تبدیلی رونما ہو سکتی ہے، چوہدری پرویز الہیٰ اگلے وزیراعلیٰ ہو سکتے ہیں، پنجاب اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد لائی جا سکتی ہے۔ تفصیلات کے مطابق انگریزی اخبار دی نیوز نے دعویٰ کیا ہے کہ پنجاب میں بڑی تبدیلی رونما ہو سکتی ہے، چوہدری پرویز الہیٰ

اگلے وزیراعلیٰ ہو سکتے ہیں۔انکا مزید کہنا ہے کہ پنجاب اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد لائی جا سکتی ہے۔ یاد رہے کہ اس سے قبل حکومت کے اتحادیوں کے ساتھ کیے گئے وعدے وفا نہ ہو سکے تھے۔ ایک نجی ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے سپیکر پنجاب اسمبلی کے صاحبزادے مونث الہیٰ کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی سے الیکشن میں سیٹ اڈجسٹمینٹ بھی ہوئی تھی، بہاولپور میں طارق بشیر چیمہ کے مقابلے میں ایک خاتون کو ٹکٹ دیا تھا۔انھوں نے کہا کہ ق لیگ کے دوسرے وزیر کا حلف نہیں اٹھوایا جا رہا تھا، ہمارے وزیر حافظ عماد کی وزارت میں بھی مداخلت کی جارہی تھی، حافظ عماد تنگ آکر وزارت سے مستعفی ہو گئے تھے۔ انکا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی سے ق لیگ نے تحریری معاہدے کیے تھے، اگر تحریک انصاف کی کشتی ڈوبے تو ہماری بھی ڈوبے گی، پی ٹی آئی سے دوبارہ وعدہ کیا ہم معاہدے پر عمل درآمد کرینگے۔انکا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کو واضع کہا کہ ہم وزارت میں دلچسپی نہیں دکھتے، اگر ہم کارکردگی نہیں دکھا سکے تو وزارتوں کا کوئی فائدہ نہیں۔ انکا مزید کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ پنجاب کو اختیارات دیے بغیر گورننس نہیں ہو سکتی، پنجاب میں ہمارا کوئی کردار نہیں جنکا ہے ان سے پوچھیں، حکومت اور بیوروکریسی میں ہم آہنگی کے بغیر کام نہیں ہو سکتا، ہم اپنی وزارتوں اور حلقوں تک صلاح دیتے رہتے ہیں، کوئی کام نہیں ہو رہا، معاملات پھنسے ہوئے ہیں، کل الیکشن میں اکھٹے جانا ہے تو معاملات حل ہونے چاہئیں، وسیم اکرم کو ہاتھ باندھ کر میدان میں بھیجیں گے تو کیا کرینگے؟، بظاہر بزدار صاحب کچھ کرنا چاہتے ہیں مگر ہاتھ بندھے ہیں، بات آگے نہ بڑھی تو آگے کا لائحہ عمل طے کرینگے، ایم کیو ایم والوں کی صورتحال زیادہ سنگین ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.