’میرے پاس تم ہو کی آخری قسط روکی جائے ورنہ۔۔۔‘نامور خاتون نے ڈرامہ سیریل کے خلاف عدالت میں درخواست دائر کر دی مگر کیوں؟ دلچسپ تفصیلات

لاہور (ویب ڈیسک) ڈرامہ سیریل میرے پاس تم ہو کی آخری قسط کو نشر ہونے سے روکنے کیلئے عدالت میں درخواست دائر کردی گئی۔ماہم جمشید بٹ نامی خاتون نے اپنے وکیل ماجد چوہدری کی وساطت سے سینئر سول جج لاہور کو دی گئی درخواست میں موقف اپنایا ہے کہ ڈرامہ سیریل ’میرے پاس تم ہو‘ میں

خواتین کی تضحیک کی جارہی ہے اس لیے اس کی آخری قسط کو نشر ہونے سے روکا جائے۔ مقبول عام ڈرامہ سیریل کی آخری قسط 25 جنوری کو ٹی وی اور سینما گھروں میں ریلیز کی جائے گی۔خاتون نے اپنی درخواست میں چیئرمین پیمرا، پنجاب فلم سینسر بورڈ، میرے پاس تم ہو کے ڈائریکٹر اور پروڈیوسر کو فریق بنایا ہے۔ عدالت نے خاتون کا موقف سننے کے بعد فریقین کو نوٹس جاری کردیے ہیں۔ واضح رہے کہ سول کورٹ میں پاکستان کے مقبول ترین ڈرامے ’’میرے پاس تم ہو‘‘ کی آخری قسط نشر ہونے سے رکوانے کے لیے درخواست دائر کردی گئی۔لاہور کی سول عدالت میں ڈرامے کی آخری قسط نشر ہونے سے رکوانے کے لیے ماہم نامی خاتون نے اپنے وکیل ماجد چوہدری ایڈووکیٹ کی وساطت سے درخواست دائر کی ہے۔خاتون نے درخواست میں موقف اختیار کرتےہوئے کہا ہے کہ ڈرامے میں خواتین کی مسلسل تضحیک اور عورت کو معاشرے میں کم تر دکھانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ ڈرامے نے پاکستانی خواتین پر مثبت نتائج نہیں ڈالے۔ خاتون نے عدالت سے استدعا کرتے ہوئے کہا کہ عدالت فوری ڈرامے کی آخری قسط نشر ہونے سے روکنے کا حکم دے۔ خاتون کا موقف سننے کے بعد عدالت نے 24 جنوری کے لیے نوٹس جاری کردیئے۔واضح رہے کہ خلیل الرحمان قمر کے لکھے ہوئے ڈرامے ’’میرے پاس تم ہو‘‘ نے پاکستان بھر میں مقبولیت کے ریکارڈ توڑ دئیے ہیں۔ اس ڈرامے کا موازنہ سوشل میڈیا پر پی ٹی وی کے دور کے ڈراموں سے کیا جارہا ہے۔ ڈرامے کی مقبولیت کو دیکھتے ہوئے ہی ڈرامے کے پروڈیوسر اور مرکزی اداکار ہمایوں سعید اور ڈائریکٹر ندیم بیگ نے اس کی آخری قسط ٹی وی کے بجائے سینما میں ریلیز کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.