صبح صبح بڑا سیاسی تہلکہ : شاہ محمود قریشی اور جہانگیر ترین کے درمیان اختلافات ختم ۔۔۔۔ یہ کارنامہ کس نے اور کیسے سرانجام دیا؟ حیران کن انکشاف

ملتان (ویب ڈیسک) پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے حلقے میں تعمیراتی کام نہ ہونے کی صورت میں لوگوں نے شدید احتجاج کیا جس کے جواب میں شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان ابھی ملک کے دیگر اور اہم مسائل پر کام کر کر رہے ہیں ، مقبوضہ کشمیر پر


ثالثی بنا رہے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے ملتان میں جلسے سے خطاب میں کہا کہ انشاء اللہ اب سندھ میں بھی تحریک انصاف کی حکومت ہوگی، ملکی معیشت استحکام کی طرف گامزن ہے ۔ ملتان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا پاکستان محفوظ ہاتھوں میں ہے ، ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کومشکل حالات میں حکومت ملی۔ ہم نے اقتدار سنبھالا تو خزانہ خالی تھا۔ چین، سعودی عرب اور یو اے ای مدد نہ کرتے توملک دیوالیہ ہو جاتا۔ وزیر خارجہ کا مزید کہنا تھا کہ وزیراعظم نے 13 ماہ میں مشکل فیصلے کیے، تسلیم کرتے ہیں کہ ملک میں مہنگائی ہوئی ہے۔ معیشت استحکام کی جانب گامزن ہے۔ جلسہ گاہ آمد سے قبل سورج کند روڈ کے مکینوں نے احتجاج کیا، سورج کند روڈ کے مکینوں نے بنیادی سہولتوں کی فراہمی کے لئے احتجاج کیا۔ مکینوں کا کہنا تھا کہ سورج کند روڈ کی ٹوٹ پھوٹ ہے، سیوریج نظام بدحالی کا شکار ہے، شاہ محمود کے وعدوں کے باوجود مسائل حل نہیں ہو رہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں جلد روز گار کے مواقع پیدا ہونگے ، تحریک انصاف کی حکومت نے جب اقتدار سنبھالا تو خزانہ خالی تھا ۔ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ چین،سعودی عرب اور یواے ای مدد نہ کرتے توملک دیوالیہ ہو جاتا، تسلیم کرتے ہیں کہ ملک میں مہنگائی ہوئی ہے، معیشت استحکام کی جانب گامزن ہے ۔انہوں نے کہا کہ چینی سرمایہ کار پاکستان میں سرمایہ کاری کیلئے تیارہیں، سی پیک منصوبے کوکچھ نہیں ہوگا۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین سے اپنے اختلافات ختم کرنے کا اقرار کر لیا ۔ملتان میں کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ حج پر جانے سے پہلے جہانگیر ترین سے اختلافات ختم کر دئیے تھے ، جہانگیر ترین سے کہا تھا جو بھی عداوت تھی ختم کر کے جا رہا ہوں ۔ انہوں نے کہا کہ جہانگیر ترین کے لیے میرا دل صاف ہے ، جہانگیر ترین اور چودھری سرور سے میرے کوئی اختلافات نہیں ، ہم سب عمران خان کے سپاہی ہیں ان کو مزید مضبوط کریں گے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل شاہ محمود قریشی نے جہانگیر ترین سے متعلق بیان دیا تھا کہ جو لوگ عدالت کی جانب سے نا اہل ہوں انہیں وزیراعظم کے ساتھ میٹنگز میں نہیں بیٹھنا چاہیے ۔

Sharing is caring!

Comments are closed.