اگر نواز شریف سودے بازی کر سکتا ہے تو ہم کیوں نہیں۔۔۔!!! کون کونسے لیگی رہنماء تحریک انصاف میں شامل ہونے جا رہے ہیں؟ (ن) لیگ کے شیروں نے سیاسی جنگل میں ہلچل مچا دی

لاہور( نیوز ڈیسک) مسلم لیگ ن کے رہنماؤں نے پی ٹی آئی میں جانے کیلئے سودے بازی شروع کردی، ن لیگی رہنماؤں کو پی ٹی آئی رہنماء نے پی ٹی آئی میں شرکت کی دعوت دی، جس پر ن لیگی رہنماؤں نے کہا کہ اگر ہماری قیادت سودے بازی کرسکتی ہے تو ہم کیوں نہیں؟ سینئر

تجزیہ کار اور صحافی حامد میر نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن کے ایک بڑے راہنماء کو پی ٹی آئی میں شرکت کی دعوت دی۔وہاں دو اور ن لیگی ارکان بیٹھے تھے۔ میرا خیال تھا کہ یہ سخت ردعمل دیں گے۔ انہوں نے میرا لحاظ بھی نہیں کیا۔ میں نے پوچھا یہ سب سرعام؟ میرا لحاظ تو کرلیتے۔ ن لیگی رہنما نے مجھے کہا کہ ہماری قیادت اگر یہ کام کرتی ہے تو ہم کیوں نہ سودے بازی کریں؟ حامد میر نے کہا کہ اپوزیشن اگر ہے تو بس 6 جماعتوں کی ہے جن کا مولانا فضل الرحمٰن کے ساتھ کل اجلاس ہوا تھا۔انہوں نے کہا کہ مریم نواز میرا ایشو نہیں ہے، میں پاکستان میں رہتا ہوں، میرا مسئلہ مہنگائی اور عوامی مسائل ہیں، مریم نوازکے باہر جانے کا مسئلہ ن لیگ کا ہے، ن لیگ نے اس کو بڑا ایشو بنایا ہوا ہے۔ن لیگ کی مہنگائی کیخلاف تحریک مریم نواز کے باہر جانے کیلئے ہے۔میرے پاس اطلاعات یہ ہیں کہ عمران خان نے ان کو بتا دیا ہے کہ مریم نواز کو باہر نہیں جانے دیا جائے گا۔واضح رہے مسلم لیگ ن نے مہنگائی کیخلاف پارلیمنٹ کے اندر اور باہر احتجاج کا فیصلہ کرلیا ہے۔ قومی اسمبلی اجلاس میں پیر سے احتجاج ریکارڈ کروانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ جبکہ منگل سے پارلیمنٹ کے گیٹ نمبر ایک کے باہراحتجاج کیا جاے گا۔ سابق وزیراعظم ورکن قومی اسمبلی شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ ملک میں مہنگائی کے حقائق جاننے کے لیے قومی اسمبلی کی سپیشل کمیٹی قائم کی جائے۔دوسری جانب مریم نواز کی بیرون ملک جانے کی اجازت کی درخواست پر سماعت کرنے والابنچ تحلیل ہو گیا ۔چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس مامون رشید شیخ نے نیا دو رکنی بنچ تشکیل دیدیا ہے ۔بنچ کے سربراہ جسٹس علی باقر نجفی ہوں گے جبکہ جسٹس طارق سلیم شیخ بھی بنچ کا حصہ ہیں ۔مریم نواز کی درخواست پر ابتدائی سماعت جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں بنچ نے کی تھی ۔جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں قائم بنچ کی تحلیل کی وجہ سے دوسرا بنچ تشکیل دیا گیا۔

Sharing is caring!

Comments are closed.