تمھارے باپ کا پیسہ تھا جو ہڑپ گئے!!! احسن اقبال اپنے انجام کو۔۔۔حکومت کی جانب سےدھماکہ خیز اعلان کر دیا گیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک)قومی احتساب بیورو (نیب) نے مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر داخلہ احسن اقبال کی ضمانت کی مخالفت کر دی۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں نارووال اسپورٹس کمپلیکس اسکینڈل کی سماعت ہوئی جس میں نیب نے احسن اقبال کی ضمانت کی مخالفت کر دی۔قومی احتساب بیورو نے احسن اقبال کی ضمانت پر

جواب ہائی کورٹ میں جمع کروا دیا، نیب نے جواب میں موقف اپنایا کہ احسن اقبال کی درخواست قابل سماعت نہیں، خارج کی جائے، احسن اقبال نے قومی خزانے کو نقصان پہنچایا۔نیب کے مطابق درخواست گزار غیر معمولی حالات، یارڈشپ نہیں ثابت کرسکے۔ احسن اقبال کی ضمانت پر نیب کا جواب 2 صفحات پر مشتمل ہے۔یاد رہے کہ 30 جنوری کو مسلم لیگ ن کے رہنما نے اسلام ہائی کورٹ میں ضمانت کے لیے درخواست دائر کی تھی جس میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ احسن اقبال نے کبھی نیب میں پیش ہونے سے انکار نہیں کیا۔واضح رہے کہ 23 دسمبر کو قومی احتساب بیورو ( نیب) نے سابق وزیر داخلہ و مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما احسن اقبال کو گرفتار کیا تھا۔جبکہ دوسری جانب ایک خبرکے مطابق قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور پاکستان مسلم لیگ (ن) کےصدرمیاں شہباز شریف نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کو دانستہ طور پر معاشی دیوالیہ پن کی طرف دھکیلا جارہا ہے،حکومت معیشت کی گاڑی کواندھےڈرائیور کی طرح ریورس میں چلارہی ہے،صحتمند اور دوڑتی ہوئی ملکی معیشت کو کرپٹ ٹولے نے تباہ کردیا ہے،آٹا اور چینی چور وزیراعظم کی سرپرستی میں محفوظ اور بے قصور تاجروں کو جیلوں میں بند کیاجارہا ہے،عوام ،تاجر اور سیاست دان ملکی معیشت بچانے کے لیے متحد اور تیار ہو جائیں۔میاں شہباز شریف نےمعاشی خطرات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ معیشت کی تباہی سے پاکستان کی سالمیت اندر سے کھوکھلی ہورہی ہے، صحت مند ہوتی، دوڑتی معیشت کو کرپٹ ٹولے نے تباہ کر دیا ہے،سود کی شرح بڑھا کر کاروبار، روزگاراور بجلی گیس بڑھا کر عوام کا معاشی قتل عام کیاگیا،11000 ارب قرض ملک کو معاشی بیڑیوں میں جکڑنے کے لئے لیاگیا، جس کا قوم کو فائدے کے بجائے نقصان ہوا،عوام تاجر اور سیاستدان معیشت بچانے کے لئے متحد اور تیار ہوجائیں، عوام اور ملک کا معاشی قتل مزید برداشت نہیں کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ آٹا اور چینی چور وزیراعظم کی سرپرستی میں محفوظ اور بے قصور تاجروں کو جیلوں میں بند کیاجارہا ہے،عوام ،تاجر اور سیاست دان ملکی معیشت بچانے کے لیے متحد اور تیار ہو جائیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.