حالات بگڑ گئے۔۔!! کرفیو نُما لاک ڈاؤن کا فیصلہ، حکومت نے نوٹیفیکیشن جاری کر دیا

کراچی (نیوز ڈیسک) کراچی کے مختلف علاقوں میں دو ہفتے کا مکمل لاک ڈاؤن کر دیا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق کمشنر کراچی نے شہر کی مختلف یونین کونسل میں سخت لاک ڈاؤن کرنے کے احکامات جاری کر دیے ہیں۔‏لاک ڈاؤن 18 جون سے 2 جولائی تک ہوگا۔جاری نوٹیفکیشن کے مطابق کمشنر کراچی نے

شہر کی مختلف یونین کونسل میں سختلاک ڈاؤن لگانے کے احکامات جاری کئے ہیں۔ڈپٹی کمشنر نے محکمہ صحت کی سفارش پر لاک ڈاؤن لگانے کی تجویز دی تھی۔لاک ڈاؤن کا نفاذ شہر کی 41 یوسیز کے مختلف ہاٹ اسپاٹ پر ہوگا۔ضلع کورنگی اور جنوبی کی 55 یوسیز میں،ضلع شرقی کی 17،غربی کی چھ یونین کونسل،ضلع ملیر کی چھ اور ضلع وسطی کی دو یونین کونسلز کے ہاٹ سپاٹس پر لاک ڈاؤن ہوگا۔لاک ڈاؤن والے مقامات پر ماسک کا استعمال لازمی ہوگا۔نوٹیفیکیشن کے مطابق حساس مقامات پر کریانہ اور میڈیکل سٹور کھولنے رہیں گے جبکہ لاک ڈاأن والے علاقے میں ہر طرح کے صنعتی یونٹ بند رہیں گے اور ہر قسم کی سرگرمیاں بھی معطل رہیں گی۔اس علاقے میں ریسٹورنٹ کی ھوم ڈلیوری اور ٹیک اوے سروس بھی معطل رہے گی۔اس کے علاوہ مریض کے ساتھ اس علاقے سے ایک تیماردار کو جانے کی اجازت ہوگی جبکہ گھروں میں ہر طرح کی نجی محفل پر بھی پابندی ہوگی۔خیال رہے کہ ملک بھر میں اب تک کورونا سے صحتیاب ہونے والے مریضوں کی تعداد 58 ہزار 437 ہے، گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 5 ہزار 839 نئے کیسز کا اضافہ ہوا ہے۔این سی او سی کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران پورے ملک کے طول و عرض میں کورونا کے 28 ہزار 117 نئے ٹیسٹس کیے گئے، آزاد کشمیر اور بلوچستان میں کوئی بھی مریض وینٹی لیٹر پر نہیں ہے۔این سی او سی کے مطابق پورے ملک میں کورونا کے مریضوں کیلئے مختص شدہ 1 ہزار 400 وینٹیلیٹرز پر 499 مریض داخل ہیں، اس وقت پاکستان میں ٹوٹل ایکٹیو کووڈ کیسز کی تعداد 93 ہزار 348 ہے جبکہ ملک بھر میں کورونا مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 54 ہزار 760 پر پہنچ گئی ہے۔انہوں نے بتایا کہ آزاد کشمیر میں 703 کورونا کے مریض، بلوچستان میں 8 ہزار 437، گلگت بلتستان میں 1 ہزار 164،وفاقی دارلحکومت اسلام آباد میں 9 ہزار 242 ، خیبرپختونخوا میں 19 ہزار 107، پنجاب میں 58 ہزار 239 اور سندھ میں 57 ہزار 868 کورونا کے مریض ہیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.