کورونا وائرس کب تک پاکستان سے مکمل طور پر ختم ہو جائے گا؟ حکومت پاکستان نے اب تک کی سب سے بڑی خبر بریک کر دی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) کورونا وائرس کے حوالے سے اگرچہ ملک بھرمیں لاک ڈاون ہے تعلیمی ادارے بند ہیں اور سوائے اشیائے ضروریہ کے دیگر معاملات زندگی کو معطل کردیا گیا ہے تاہم اس سب سے بھی صورتحال ابھی بہتری کی طرف گامز ن نہیں ہوسکی۔یاد رہے پاکستان میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

اور آج بھی مزید کیسز سامنے آنے کے بعد متاثرین کی تعداد 7 ہزار تک پہنچ گئی ہے۔پاکستان میں اس وائرس کا پھیلاؤ مارچ کے آخر تک اتنا زیادہ نہیں تک تاہم اپریل کے آغاز سے اس میں کافی تیزی دیکھنے میں آئی ہے۔اب تک کے اعداد و شمار کو دیکھیں تو صرف اپریل کے 10 روز میں 27سو سے زیادہ کیسز اور 75 اموات ریکارڈ کی گئیں۔صوبائی وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ کورونا وائرس کے حوالے سے آئندہ بیس سے 25دن انتہائی حساس ثابت ہوسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وہ پوری قوم سے گزارش کرتے ہیں کہ اگلے بیس پچیس دنوں کو آسان نہیں لینا، ہم نے گزشتہ ڈیڑھ ماہ سے ذمہ دار اور باوقار قوم کی حیثیت سے حکومت ، ڈبلیو ایچ اور اور عمران خان کی جانب سے جو ہدایات اور ایس او پیز جاری کرتے رہے ملک کے تمام ادارے ان پر عمل کرتے رہے جس کی وجہ سے صورتحال قدرے بہتر ہے تاہم اگر آئندہ بیس پچیس دنوں میں کسی بھی ذمہ دار شخص یا ادارے کی جانب سے اس معاملے پر غفلت کا مظاہرہ کیاگیاتو اس کا ناقابل تلافی کا نقصان ہوگا۔انہوں نے کہا ہم نے پاک فوج کے ساتھ ملکر بہادری کے ساتھ دہشت گردی کے خلاف جنگ جیتی اور اب ہم انشااللہ کورونا وائرس کے خلاف بھی جنگ جیتیں گے، انہوں نے کہا امید ہے اس حوالے سے پاکستان کی وفاقی و صوبائی حکومتیں جو ہدایات جاری کریں گی قوم ان پر عملدرآمد کرے گی۔ ورونا وائرس کے حوالے سے اگرچہ ملک بھرمیں لاک ڈاون ہے تعلیمی ادارے بند ہیں ۔

اور سوائے اشیائے ضروریہ کے دیگر معاملات زندگی کو معطل کردیا گیا ہے تاہم اس سب سے بھی صورتحال ابھی بہتری کی طرف گامز ن نہیں ہوسکی۔صوبائی وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ کورونا وائرس کے حوالے سے آئندہ بیس سے 25دن انتہائی حساس ثابت ہوسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وہ پوری قوم سے گزارش کرتے ہیں کہ اگلے بیس پچیس دنوں کو آسان نہیں لینا، ہم نے گزشتہ ڈیڑھ ماہ سے ذمہ دار اور باوقار قوم کی حیثیت سے حکومت ، ڈبلیو ایچ اور اور عمران خان کی جانب سے جو ہدایات اور ایس او پیز جاری کرتے رہے ملک کے تمام ادارے ان پر عمل کرتے رہے جس کی وجہ سے صورتحال قدرے بہتر ہے تاہم اگر آئندہ بیس پچیس دنوں میں کسی بھی ذمہ دار شخص یا ادارے کی جانب سے اس معاملے پر غفلت کا مظاہرہ کیاگیاتو اس کا ناقابل تلافی کا نقصان ہوگا۔انہوں نے کہا ہم نے پاک فوج کے ساتھ ملکر بہادری کے ساتھ دہشت گردی کے خلاف جنگ جیتی اور اب ہم انشااللہ کورونا وائرس کے خلاف بھی جنگ جیتیں گے، انہوں نے کہا امید ہے اس حوالے سے پاکستان کی وفاقی و صوبائی حکومتیں جو ہدایات جاری کریں گی قوم ان پر عملدرآمد کرے گی۔یاد رہے پاکستان میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.