کرونا وائرس کا علاج ہر گھر میں موجود، چین نے پوری دُنیا کو نسخہ بتا دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی میڈیکل ایسوسی ایشن کے رسالے میں شائع ہونے والی نئی تحقیق میں کہاگیاکہ ماہر وبائی امراض ماریہ وان کرک ہوو نے حال ہی میں چین کا دورہ کیا۔ان کا کہنا تھا کہ صورتحال کی شدت میں حقیقی کمی آچکی ہے اور چینی ماہرین وائرس کا پھیلاو روکنے کے لیے اپنے تجربات دنیا کو بتانے کے لیے تیار ہیں۔

ماہرین کی رپورٹ میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ گھروں میں استعمال ہونے والا عام فنائل کرونا وائرس کو ختم کرنے کے لیے کافی ہے۔ امریکی میڈیکل ایسوسی ایشن کے رسالے میں شائع ہونے والی نئی تحقیق کے مطابق دن میں 2 بار عام فنائل سے کی جانے والی صفائی کرونا وائرس کو مارنے کے لیے کافی ہے۔ ماہرین کے مطابق فنائل سے فرش کے علاوہ مریض کے زیر استعمال واش بیسن اور بیت الخلا کی صفائی سے کرونا وائرس پر قابو پایا جا سکتا ہے۔دوسری جانب متحدہ عرب امارات میں کرونا وائرس کے ایک درجن سے زائد مریض سامنے آچکے ہیں۔ خوش قسمتی سے موثر علاج کی بناء پر زیادہ تر مریض صحت یاب ہو چکے ہیں اور کچھ کا علاج جاری ہے۔ مگر کرونا وائرس کی دہشت لوگوں کے ذہنوں پر بْری طرح سوار ہے۔ گزشتہ روز بھی ایک بھارتی طالب کرونا وائرس کا شکار نکلا۔ جس کے بعد لوگوں میں تشویش اور فکر مندی کی نئی لہر دوڑ گئی ہے۔اماراتی مملکت کی موثر حفاظتی تدابیر کی بدولت مملکت میں کرونا وائرس بہت زیادہ قابو میں ہے۔ اماراتی حکومت نے مملکت میں مقیم تمام مقامی اور تارکین وطن کو ہدایت کی ہے کہ وہ کرونا وائرس کی عالمی وبا کے پیش نظر دیگر ممالک کا سفر کرنے سے گریز کریں، تاکہ وہ کرونا کا شکار ہونے سے محفوظ رہ سکیں۔

وزارت صحت کی جانب سے لوگوں کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ حالیہ صورت حال کو مدنظر رکھتے ہوئے اماراتی مملکت سے باہر کا سفر نہ کریں۔وزارت صحت کے پیغام میں خبردار کیا گیا ہے کہ جو لوگ ان دنوں مملکت سے باہر جا رہے ہیں انہیں واپس پر اماراتی ایئر پورٹس پر سخت میڈیکل چیک اپ سے گزرنا پڑ رہا ہے اور تھوڑا سا بھی شبہ ہونے پر اْنہیں کئی روز کے لیے قرنطینہ میں رکھا جاتا ہے، جب تک اس بات کی تصدیق نہ ہو جائے کہ واقعی وہ کرونا وائرس کے مرض سے محفوظ ہیں۔ واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات میں تمام نجی اور سرکاری سکولز اور کالجز 4ہفتوں کے لیے بند کیے جا رہے ہیں۔اس فیصلے کا اطلاق آئندہ اتوار کے روز سے ہو گا۔ یہ فیصلہ مملکت میں کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کے خدشے کے باعث لیا گیا ہے۔اماراتی وزارت تعلیم کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ متحدہ عرب امارات کے تمام سرکاری و نجی اسکولز، کالجز اور یونیورسٹیز میں موسم بہار کی تعطیلات کا آغاز قبل از وقت کیا جا رہا ہے۔ موسم بہار کی تعطیلات 8 مارچ 2020ء بروز اتوار سے شروع ہوں گی۔وزارت کی جانب سے فاصلاتی تعلیم کے آغاز کا اعلان بھی کیا گیا ہے۔ جس کا مقصد مملکت بھر کے طالب علموں میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کی خاطر احتیاطی تدابیر اختیار کرنا ہے۔وزارت تعلیم کے اعلان میں کہا گیا ہے کہ مملکت میں تمام اسکولز اور اعلیٰ سطح کے تعلیمی ادارے اتوار کے روز سے چار ہفتوں کے لیے بند کیے جا رہے ہیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.