گورنرپنجاب کا نئی کا بینہ سے حلف لینے کا فیصلہ! بلیغ الرحمان کس کے کہنے پر آمادہ ہوئے؟

گورنرپنجاب کا نئی کا بینہ سے حلف لینے کا فیصلہ! بلیغ الرحمان کس کے کہنے پر آمادہ ہوئے؟

گورنرپنجاب بلیغ الرحمن نے کابینہ سے حلف لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ وزیراعطم کی ہدایات پر گورنر پنجاب نے اسٹاف کو آگاہ کر دیا۔گورنر ہاؤس میں تقریب

حلف برداری کے لیے انتظامات شروع کر دئیے گئے ہیں۔اسی حوالے سے پاکستان تحریک انصاف کی رہنما یاسمین راشد کا کہنا ہے کہ مختصر کابینہ اس لیے رکھی

ہےکیونکہ ہم جلد الیکشن چاہتے ہیں۔کابینہ مختصر وقت کیلئے بنائی گئی ہے۔امید ہے کہ کل حلف برداری ہوجائے گی،سنا ہے گورنر پنجاب مان گئے ہیں،

گورنر پنجاب بلیغ الرحمن نے کابینہ سے حلف لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ چئیرمین تحریک انصاف عمران خان نے 18 رکنی پنجاب کابینہ کی منظوری دی تھی۔

سابق وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار کو پنجاب اسمبلی میں پارلیمانی لیڈر مقرر کر دیا گیا۔ذرائع کے مطابق ابتدائی مرحلہ میں چیرمین تحریک انصاف عمران خان نے پنجاب کابینہ کی تشکیل کے لیے ناموں کی منظوری دیدی ہے ۔

پہلے مرحلہ میں تحریک انصاف کے 23 اور ق لیگ کے 2 وزراء حلف اٹھائیں گے۔ ذرائع کے مطابق جن وزراء کے ناموں پر مشاورت مکمل کی گئی ہے ان میں یاسمین راشد، بشارت راجہ، محمود الرشید، مراد راس اور فیاض چوہان، زین قریشی، صمصام بخاری، غضنفر چھینہ، ہمایوں یاسر اور عنصر مجید نیازی شامل ہیں جبکہ دیگر میں جہانزیب کچھی، ہاشم ڈوگر، ساجد بھٹی، حافظ عمار یاسر اور ہاشم جواں بخت،راشد حفیظ، حامد یار ہراج، حسنین بہادر دریشک، میاں اسلم اقبال اور چوہدری ظہیر الدین کے علاوہ تیمور بھٹی، یاور بخاری، شہباز گل، فواد چوہدری اور فرخ حبیب کے نام بھی شامل ہیں۔عمران خان نے مونس الہیٰ سے ملاقات میں پنجاب کابینہ میں ق لیگ کی نمائندگی کی منظوری دی تھی۔مونس الہیٰ نے کہا تھا کہ عمران خان نے ہمیں وزیراعلیٰ بنایا، انہیں یقین دلایا کہ مزید کچھ نہیں چاہیے،عمران خان کی مہربانی کہ دوسرے مرحلےمیں ق لیگ کو وزارتیں دینے کی منظوری دی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.