پاک امریکا تعلقات میں اہم پیشرفت!! امریکا نے بڑی یقین دہانی کرا دی

پاک امریکا تعلقات میں اہم پیشرفت!! امریکا نے بڑی یقین دہانی کرا دی

لاہور: (ویب ڈیسک) پاک امریکا تعلقات میں اہم پیشرفت سامنے آئی ہے اور بائیڈن انتظامیہ نے پی آئی اے کی امریکا کے لیے پروازیں بحال کرنے کے لیے اقدامات اٹھانے کی یقین دہانی کرا دی ہے۔ وزیراعظم کے اسٹریٹجک ریفارمز یونٹ کے سربراہ سلمان صوفی کی امریکی عہدیداران سے ملاقاتوں

میں دوطرفہ تعلقات، تجارت کا فروغ، افغان صورتحال اور پی آئی اے کی پروازوں کی بحالی کے امور پر گفتگو ہوئی۔ واشنگٹن میں نجی ٹی وی کو انٹرویو میں سلمان صوفی نے بتایا کہ بائیڈن انتظامیہ نے پی آئی اے کی امریکا کے لیے پروازیں بحال کرنے کے لیے اقدامات اٹھانے کی یقین دہانی کرائی ہے اور پاکستان اس مقصد کے لیے

ایف اے اے کو انسپیکشن کی دعوت بھی دے گا۔ خیال رہے کچھ روز قبل قومی ائیر لائن (پی آئی اے) کو تاریخ میں پہلی مرتبہ امریکا کے لیے براہ راست پروازیں چلانے کی اجازت ملی تھی۔ سی ای او پی آئی اے ائیر مارشل ارشد ملک نے پچھلے ہفتے امریکا کے لیے براہ راست پروازیں چلانے کی باضابطہ درخواست دی تھی جس کی امریکی محکمہ ٹرانسپورٹ نے منظوری دیدی ہے۔

امریکی محکمہ ٹرانسپورٹ کی جانب سے جاری مراسلے میں کہا گیا ہے کہ پی آئی اے ایک ماہ کے دوران ایک درجن پروازیں چلا سکتا ہے۔ پی آئی اے نے کبھی براہ راست امریکا کے لیے براہ راست پروازیں نہیں چلا ئیں۔ پی آئی اے کو امریکا کے لیے براہ راست پروازوں کی اجازت نہ ہونے کے باعث پروازیں یورپ یا برطانیہ کے ائیرپورٹس سے سیکورٹی کلئیرنس ملنے کے بعد امریکا کے لے جایا کرتی تھیں۔

ترجمان پی آئی اے کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ براہ راست پروازوں کی اجازت ملک کی سیکیورٹی صورتحال میں بہتری، حکومتی پالیسی اور پی آئی اے کے سیکیورٹی سے متعلق اقدامات کی عکاس ہے۔ وزیر اعظم عمران خان نے ذاتی طور پر امریکا کے لیے براہ راست پروازیں چلانے اور وہاں پھنسے پاکستانیوں کو جلد از جلد واپس لانے کے لیے اقدامات کیے۔

قومی ائیر لائن کے ترجمان کا کہنا ہے کہ سی ای او پی آئی اے ارشد ملک نے اس ضمن میں خصوصی طور پر وزیر اعظم پاکستان، وزیر ہوا بازی اور وزارت خارجہ کے تعاون اور کاوشوں کا شکریہ ادا کیا۔ سی ای او پی آئی اے ارشد ملک کا کہنا ہے کہ پی آئی اے امریکا کے لیے ریلیف پروازیں چلائے گا جہاں ہزاروں پاکستانی واپسی کے منتظر ہیں۔ ائیر مارشل ارشد ملک کا کہنا ہے کہ پی آئی اے ان میتوں کو بھی بلا کسی معاوضے کے واپس لے کر آئے گا جو دیار غیر میں چل بسے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پی آئی اے ایک قومی ادارہ ہے اور قومی ادارے مصیبت کے وقت میں خاندان کے فرد کی مانند پاکستان کی خدمت میں پیچھے نہیں ہٹتے۔ سی ای او پی آئی نے کہا کہ آخری پاکستانی کے وطن واپسی تک پی آئی اے کا آپریشن جاری رہے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.