عمران خان کو جان سے مارنے کی دھمکی!!! پی ٹی آئی نے بڑؑا قدم اٹھالیا

عمران خان کو جان سے مارنے کی دھمکی!!! پی ٹی آئی نے بڑؑا قدم اٹھالیا

اسلام آباد: (ویب ڈیسک) عمران خان کو جان سے مارنے کی دھمکی پر تحریک انصاف کے رہنما عمر ایوب نے ایمل ولی خان کے خلاف تھانہ سیکریٹریٹ میں ایف آئی آر درج کرنے کی درخواست دے دی۔ میڈیا سے گفتگو میں عمر ایوب نے کہا کہ اے این پی کے سربراہ ایمل ولی خان نے عمران

خان کو جان سے مارنے کی بات کی، پی ڈی ایم غیر جمہوری عمل کی طرف شروع ہو چکی ہے اور لوگوں کو ٹھکانے لگانے کی سازش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سیکیورٹی فورسز اور وزارت داخلہ میں درخواستیں دی ہیں، عمران خان کی جان کو خطرہ ہے اس لیے سیکیورٹی دی جائے۔

عمر ایوب نے کہا کہ پی ایم ہاؤس میں بیٹھ کر یہ لوگ عمران خان کو ٹھکانے لگانے کی بات کر رہے ہیں لیکن ہم عمران خان کے دفاع کے لیے سیسہ پلائی دیوار بن کر کھڑے ہیں، موجود وزیراعظم سی ڈی اے کی حدود تک کے وزیراعظم ہیں۔ پی ٹی آئی رہنما کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف ایک پر امن اور ملک میں پھیلی ہوئی جماعت ہے۔

دوسری جانب سپریم کورٹ میں ججز تقرری کے لیے جوڈیشل کمیشن اجلاس میں چیف جسٹس کے نامزد کردہ تمام نام کثرت رائے مسترد کردیے گئے۔ سپریم کورٹ میں چیف جسٹس پاکستان کی زیر صدارت جوڈیشل کمیشن کا اجلاس ہوا جس میں کسی بھی جج کو سپریم کورٹ لانے کی منظوری نہ ہو سکی اور جوڈیشل کمیشن نے زیر غور تمام ناموں کو کثرت رائے سے مسترد کردیا۔

ذرائع کے مطابق چیف جسٹس کے نامزد ججوں کے خلاف 5 ووٹ آئے، مخالفت میں آنے پر اجلاس کچھ کہے بغیر ختم کر دیا گیا۔ جسٹس قاضی فائز عیسی، جسٹس طارق مسعود ، اٹارنی جنرل، وفاقی وزیر قانون اور ممبر اختر حسین نے مخالفت میں ووٹ دیے۔ واضح رہے کہ چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں جوڈیشل کمیشن اجلاس میں 5 ججز کے ناموں پر غور کیا گیا تھا۔

اس حوالے سے بتایا گیا کہ جوڈیشل کمیشن اجلاس میں لاہور ہائیکورٹ کے جج جسٹس شاہد وحید کو سپریم کورٹ کا جج بنانے پر غور شامل تھا۔ پشاور ہائیکورٹ کے جج جسٹس قیصر رشید خان کو سپریم کورٹ کا بنانے پر بھی غور کیا گیاعلاوہ ازیں سندھ ہائیکورٹ سے 3 ججز، جسٹس حسن اظہر رضوی،جسٹس شفیع صدیق، جسٹس نعمت اللہ کو سپریم کورٹ کے جج بنانے پر غور کیا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.