“میں اپنے خاوند ساتھ رہتی تھی وہ میرے ساتھ جنسی عوامل کے لئے مشینوں کا استعمال کرتی تھی جب مجھے پتہ چلا کہ وہ۔۔” 22 سالہ لڑکی کا اپنے خاوند کے بارے میں عجیب و غریب انکشافات

“میں اپنے خاوند ساتھ رہتی تھی وہ میرے ساتھ جنسی عوامل کے لئے مشینوں کا استعمال کرتی تھی جب مجھے پتہ چلا کہ وہ 22 سالہ لڑکی کا اپنے خاوند کے بارے میں عجیب و غریب انکشافات

شادی کے 10 ماہ بعد خاتون کا اپنے شوہر کے متعلق تہلکہ خیز انکشاف۔ نیوز ڈیسک:شادی ایک مقدس فریضہ ہے لیکن آج کل اس میں بھی جھوٹ کا بازار گرم ہو گیا ہے۔

جکارتہ انڈونیشیا میں ایک لڑکی نے شادی کے دس ماہ بعد اپنے شوہر سے متعلق بتایا کہ اس کا شوہر کوئی مرد نہیں ہے درحقیقت ایک عورت ہے ۔

لڑکی کی عمر 22 سال ہے اور اس نے بتایا کہ شادی کے بعد وہ اپنے شوہر کے ساتھ ہنسی خوشی رہ رہی تھی۔
لڑکی نے بتایا کہ اس کے شوہر سے اس کی ملاقات ایک ڈیٹنگ ایپ کے ذریعے ہوئی تھی ۔

پھر انھوں نے ملاقات کی اور شادی کا فیصلہ کیا ۔ اس کے شوہر نے بتایا کہ وہ امریکہ سے تعلیم حاصل کر کے آیا ہے اور حال ہی مسلمان ہوا ہے اب اپنے لئے ایک مسلم لڑکی تلاش کر رہا ہے ۔

شادی کے بعد وہ خاتون لڑکی کے گھر ہی شفٹ ہو گئی اور مختلف طریقوں سے پیسے ہتھیانے لگی۔ اب تک 30 کروڑ انڈونیشیائی کرنسی کے ہتھیا چکی ہے۔ شادی کے بعد ازداوجی تعلقات کے لئے وہ خاتون مشینوں کا استعمال کرتی تھی جس کی وجہ سے لڑکی کو علم نہ ہو سکا۔

دس ماہ بعد جب یہ حقیقت سامنے آئی تو لڑکی اور اس کے گھر والوں نے پولیس میں رپورٹ درج کروائی جس کے بعد اس خاتون کو پکڑ لیا گیا اور تفتیش کے دوران اس نے اپنے تمام جرائم کا اعتراف کر لیا ہے۔ اندازے کے مطابق اس کی سزا 10 سال قید ہو سکتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.