ادارے خاموش بیٹھ جائیں!!! حکومت کو کہا جاتا ہے ہدایات پر چلنا ہے ورنہ ۔۔۔ فضل الرحمان کا تہلکہ خیز انکشاف

ادارے خاموش بیٹھ جائیں!!! حکومت کو کہا جاتا ہے ہدایات پر چلنا ہے ورنہ ۔۔۔ فضل الرحمان کا تہلکہ خیز انکشاف

لاہور: (ویب ڈیسک) اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) و جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے انکشاف کیا ہے کہ حکومت کو کہا

جاتا ہے ہدایات پر چلنا ہے ورنہ بحران پیدا کر دیں گے۔ نجی ٹی وی سے گفتگو میں مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ ادارے خاموش بیٹھ جائیں تو کوئی بحران نہیں

عمران خان ہمارے لیے چٹکی بھی نہیں بلا بنا کر پیش نہ کیا جائے، ہم عمران خان کی اوقات جانتے ہیں اور وہ ہمیں جانتا ہے، ایسا کوئی مسئلہ نہیں۔ ان کا کہنا تھاکہ بلاوجہ اگر بحران پیش کرنا ہے تو عام آدمی کو پیش کر دو،

ملک کو بحران میں کون مبتلا کر رہا ہے کھل کر بات کرنی چاہیے۔ مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ وزیر اعظم کو یونٹی آف کمانڈ کی حیثیت حاصل ہے لیکن حکومت کو کہا جاتا ہے کہ ہدایات پر چلنا ہے ورنہ بحران پیدا کر دیں گے۔

دوسری جانب پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما طلال چوہدری نے کہا ہے کہ سیاسی جماعتیں کوئی ایسا الیکشن نہیں لڑیں گی جس میں انھیں دھکیلا جائے۔ لاہور میں میڈیا سے گفتگو میں طلال چوہدری کا کہنا تھاکہ عمران خان ملک میں انتشارپھیلانے کی باتیں کررہےہیں،

ہمیں مجبورکیاگیاکہ عمران خان کوانہی کی زبان میں جواب دیاجائے، عمران خان نے اداروں کودھمکا کرمن پسند فیصلےلینےکی کوشش کی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جمہوریت کی بقاکیلئے ہر ممکن کوششیں کیں، پارلیمنٹ کو اپنا اور سیاستدانوں کو اپنا کام کرنے دینا چاہیے، عمران خان نے معاملہ حل کرنا ہے تو پارلیمنٹ کے اندر ہوگا۔ طلال چوہدری کا کہنا تھاکہ عمران خان نے نیب کو سیاسی مقاصدکیلئے استعمال کیا، ان کے شر سے کون سا ادارہ محفوظ ہے؟ ہماری سیاست کو دھکا دے کر کنویں میں گرایا جا رہا ہے، ہم ایک جیسے قانون کا اطلاق چاہتے ہیں، سیاسی جماعتیں کوئی ایسا الیکشن نہیں لڑیں گی جس میں انہیں دھکیلا جائے۔ ان کا کہنا تھاکہ عمران خان کا سامنا اب نئی مسلم لیگ ن سے ہوگا، تھپڑماریں گےتو مکا مارا جائے گا، کیسا لاڈلہ پلس ہے جو اپوزیشن میں رہ کر بھی انکی آنکھ کا تارا ہے۔ ن لیگی رہنما نے مطالبہ کیاکہ ہمیں لیول پلیئنگ فیلڈ دی جائے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.