نشاندہی ہوگئی، سرکاری محکمے کا اہم ملازم ہی ملوث نکلا

لاہور (نیوز ڈیسک ) سانحہ رنگ روڈ، مرکزی ملزم عابد کی تصویر اور معلومات لیک کرنے والے شخص کی نشاندہی کرلی گئی ۔ میڈیا ذرائع کے مطابق سانحہ رنگ روڈ، مرکزی ملزم عابد کی تصویر اوراس کے بارے میں دیگر معلومات لیک ہونے کے معاملے کی ابتدائی رپورٹ ایوان وزیراعلیٰ کو موصول ہوگئی ۔

جس میں بتایا گیا ہے کہ رپورٹ فرانزک ڈیپارٹمنٹ سے لیک ہوئی ، رپورٹ لیک کرنے والے شخص کی بھی نشاندہی کرلی گئی ہے جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کو حتمی رپورٹ ان کے دورہ جنوبی پنجاب سے واپسی پرپیش کی جائے گی ۔میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ پنجاب کابینہ نے ملزم عابد کی تصویر لیک ہونے پرشدیداحتجاج کیاتھا ۔ دوسری طرف معروف تجزیہ کار ڈاکٹر شاہد مسعود نے انکشاف کیا ہے کہ مرکزی ملزم عابد کو پہلے ہی اطلاع مل جاتی ہے کہ پولیس کب اور کہاں چھاپے مارنے والی ہے ۔نجی ٹی وی چینل کے ایک پروگرام میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ملزم عابد جہاں کہیں بھی ہے اسے چھاپے پڑنے سے پہلے ہی اطلاع پہنچ جاتی ہے کہ پولیس کی طرف سے کہاں چھاپہ پڑنے والا ہے ، اور یہ کیا بات ہوئی اور یہ کون سا قانون ہے کہ اس کی اہلیہ کو پکڑ لیا ہے ، آج اس معاملے کو 8 دن ہو گئے ہیں اس لیے اس سارے معاملے کو سنجیدگی سے دیکھنے کی ضرورت ہے، سوچنے کی بات یہ ہے کہ یہ سب کیسے ہو رہا ہے اور یہ سب دھڑے بندی کی وجہ سے ہو رہا ہے ۔دوسری جانب ملزم عابد کی اہلیہ بشریٰ نے پولیس کو ابتدائی بیان دیدیا۔نجی ٹی وی کے مطابق پولیس ذرائع نے بتایا کہ مرکزی ملزم عابدعلی کی اہلیہ بشری نے پولیس کو ابتدائی بیان ریکارڈ کرتے ہوئے بتایا کہ اس کی عابد کیساتھ دوسری شادی ہے، عابد کئی روز تک گھر نہیں آتا تھا اور جب میں پوچھتی تھی تو وہ مجھے مارتا ۔بشریٰ نے بتایا کہ موٹر وے واقعے کے بعد عابد گھرآیا اور کا فی پریشان دکھائی دے

Sharing is caring!

Comments are closed.