ہم اپنی کوتاہیوں اور خامیوں کو تسلیم کرتے ہیں۔۔۔ چینی صدر شی جن پنگ کا شاہ سلمان سے رابطہ، سعودی عرب نے کیا پیشکش کر دی؟ تازہ ترین خبر

ریاض (ویب ڈیسک) سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز السعود نے چینی صدر شی جن پنگ سے ٹیلی فونک رابطہ کیا اور چین میں کروناوائرس کے باعث ہونے والی ہلاکتوں پر اظہار افسوس کیا۔ تفصیلات کے مطابق سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز السعود نے چینی صدر شی جن پنگ سے ٹیلی فونک رابطہ کیا

اور چین میں کروناوائرس کے باعث ہونے والی ہلاکتوں پر اظہار افسوس کیا۔اس موقع پر شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے متاثرہ افراد کی صحت یابی کے لیے دعا کی،ان کا کہنا تھا کہ چینی حکومت پر اعتماد ہے کہ وہ کروناوائرس پر قابو پا لیں گے،سعودی عرب ہنگامی بنیادوں پر چین کی بھرپور مدد کرے گا۔چینی صدر نے سعودی عرب کے بھرپور تعاون پر شاہ سلمان بن عبدالعزیز کا شکریہ ادا کیا۔چینی صدر کا کہنا تھا کہ سعودی عرب اور چین کے درمیان تعلقات مزید مستحکم ہوں گے۔ واضح رہے کہ چین میں کروناوائرس کےمزید 73نئے کیسز سامنے آئے ہیں اورمجموعی طور پر کرونا وائرس کے 3 ہزار 887 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں ۔جس کے بعد چین میں مہلک وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 28 ہزار 211 ہو چکی ہے ۔ مہلک وائرس سے زیادہ تراموات چین کے صوبہ ہوبئی میں ہوئی ہیں ۔ 60 ملین آبادی والے صوبے میں مکمل طور پر لاک ڈاؤن ہے ۔ چین کے شہرتیانجنگ میں تمام اسکول اور کاروباری مراکز آئندہ نوٹس تک بندکردیے گئے ہیں۔جبکہ چینی صدرنے ہسپتالوں کا کنٹرول بھی فوج کے حوالے کردیاہے ۔تیزی سے پھیلتے وائرس نے دنیا بھر میں خوف اور تشویش کی فضا قائم کردی ہے ۔چینی حکام نے رشتہ ازدواج میں بندھنے والےشہریوں کوشادی کی تاریخیں ملتوی کرنےکی ہدایت کردی جبکہ مرنیوالوں کی آخری رسومات بھی چھوٹی سطح پر کی جا رہی ہیں۔چین کے شہر ہوانگ گوانگ میں طبی سامان کی قلت ہوگئی جبکہ تعلیمی ادارے اورکاروباری مراکز بند کردئیے گئے ہیں ۔ چین کی اعلی قیادت نے مہلک کرونا وائرس پھیلنے سے متعلق ردعمل دینے میں “کوتاہیوں اور خامیوں ” کو تسلیم کیا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.